گلگت (عبدالرحمٰن بخاری)  مسلم لیگ ن کے صوبائی صدر اور نو منتخب رکن اسمبلی حافظ حفیظ الرحمٰن بلامقابلہ وزیراعلیٰ گلگت بلتستان منتخب ہوگئے ہیں۔ نومنتخب اسمبلی کے اجلاس کے دوسرے دن مقررہ وقت تک کسی اور رکن کی جانب سےوزارت اعلیٰ کے منصب کے لیے درخواست جمع نہیں کرائی گئی۔حافظ حفیظ الرحمٰن کل گورنر گلگت بلتستان چوہدری برجیس طاہر سے اپنے عہدے کا حلف اٹھائیں گے۔ 

اس سے قبل اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کے عہدوں کا فیصلہ ہوا۔ مسلم لیگ کے سینئر ارکان فدا محمد ناشاد اور جعفر اللہ خان بالترتیب اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر منتخب ہوئے۔ حزب ِ اختلاف کی جماعتوں کے نامزد امیدواران  تحریک انصاف کے راجہ جہانزیب اور کاچوامتیاز حیدر خان   فداناشاد اور جعفر اللہ خان کے حق میں دستبردار ہوگئے۔

کل کے اجلاس میں وزیراعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف نے بھی شرکت کرنا تھی لیکن گلگت بلتستان میں گزشتہ روز سے وقفے وقفے سے جاری بارش کے باعث ان کا دورہ ممکن نظر نہیں آتا۔

حافظ حفیظ الرحمٰن کے لیے اگلا مرحلہ اپنی کابینہ کا انتخاب ہے جو ان کی سیاسی بصیرت کا متحان بھی ہے۔ شنید ہے کہ چھے وزرا ء پر مشتمل کابینہ ترتیب پائے گی۔ گلگت بلتستان کی سیاست میں تمام اضلاع اور مکاتب کی مناسب نمائندگی کا قضیہ ہمیشہ میرٹ کو پسِ پشت ڈالتا رہا ہے۔ دیکھنا یہ ہے کہ نومنتخب وزیراعلیٰ اس مشکل کا تدارک کیسے کرتے ہیں۔  

http://apnagilgit.com/wp-content/uploads/2015/06/hafeez.jpghttp://apnagilgit.com/wp-content/uploads/2015/06/hafeez-150x150.jpgAdmin ApnaGilgitLocal NewsNews
 گلگت (عبدالرحمٰن بخاری)  مسلم لیگ ن کے صوبائی صدر اور نو منتخب رکن اسمبلی حافظ حفیظ الرحمٰن بلامقابلہ وزیراعلیٰ گلگت بلتستان منتخب ہوگئے ہیں۔ نومنتخب اسمبلی کے اجلاس کے دوسرے دن مقررہ وقت تک کسی اور رکن کی جانب سےوزارت اعلیٰ کے منصب کے لیے درخواست جمع نہیں کرائی...