گلگت: اپنا گلگت نیوز رپورٹ: عالم برج کے قریب گزشتہ روز حراموش جانے ولی مسافر وین پر ہونے والے دھماکے کے بعد ایس پی گلگت کی جانب سے ابتدائی تحقیقات کے بعد پریس بریفنگ میں یہ موقف سامنے آیا ہے کہ اس واقعے کا دہشت گردی کیساتھ کوئی تعلق نہیں بلکہ ہمیں گاڑی کے اندر سے بارود کا ایک تھیلہ ملا ہے جس سے شبہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ ڈڑائیور کی سیٹ کے نیچے موجود بارود جو معدنیات نکالنے کیلئے حراموش لے جایا جارہا تھا، وہ انجن کی تپش یا کسی اور وجہ سے پھٹ گیا ہو۔ جبکہ دوسری جانب عمائدین حراموش اور شیعہ تنظیموں نے ایس پی گلگت کی پریس کانفرنس کو واقعے سے توجہ ہٹانے کی سازش قرار دیتے ہوئے اسے دہشت گردی قرار دیا ہے اور موقف اختیار کیا ہے کہ چار روز قبل وفاقی وزارت داخلہ کی جانب سے دہشت گردی کے خدشے پر مشتمل مراسلے کے باوجود چونکہ صوبائی محکمہ داخلہ اور انتظامیہ سیکورٹی کے خاطر خواہ انتظامات کرنے میں ناکام رہی لہٰذہ اب دہشت گردی کے اس بدترین واقعے کے بعد حقائق کو مسخ کرکے عوام کی آنکھوں میں دھول جھونکنے کی ناکام کوششیں کی جارہی ہیں۔

http://apnagilgit.com/wp-content/uploads/2014/10/165840_127797170697720_745254433_n-Copy-Copy.jpghttp://apnagilgit.com/wp-content/uploads/2014/10/165840_127797170697720_745254433_n-Copy-Copy-150x150.jpgAdmin ApnaGilgitLocal NewsNews
گلگت: اپنا گلگت نیوز رپورٹ: عالم برج کے قریب گزشتہ روز حراموش جانے ولی مسافر وین پر ہونے والے دھماکے کے بعد ایس پی گلگت کی جانب سے ابتدائی تحقیقات کے بعد پریس بریفنگ میں یہ موقف سامنے آیا ہے کہ اس واقعے کا دہشت گردی کیساتھ کوئی تعلق...